’پیرس کے ایک اور خودکش حملہ آور کی شناخت‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بتاکلان تھیٹر میں ہونے والے حملے میں 90 افراد مارے گئے تھے

فرانسیسی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ پیرس کی پولیس نے گذشتہ ماہ شہر میں ہونے والے حملوں میں ملوث ایک اور شخص کی شناخت کر لی ہے۔

اطلاعات کے مطابق یہ شخص ان حملہ آوروں میں سے ایک تھا جنھوں نے بتاکلان تھیٹر میں خودکش دھماکے کیے تھے۔

پولیس کو پیرس حملوں کے ’دو نئے مشتبہ افراد‘ کی تلاش

پیرس میں حملہ کرنے والے کون تھے؟

’اباعود محاصرے کے وقت بتاکلان کے پاس موجود تھا‘

پیرس کے مختلف مقامات پر ہونے والے حملوں میں 130 افراد ہلاک ہوئے تھے جن میں سے 90 بتاکلان تھیٹر میں ہونے والے حملے میں مارے گئے تھے۔

زیادہ تر فرانسیسی میڈیا نے تیسرے حملہ آور کی شناخت ظاہر نہیں کی تاہم لی پیریشیئن اخبار نے کہا ہے کہ یہ شخص فواد محمد اغاد تھا جس کا تعلق سٹراسبرگ سے تھا۔

اخبار نے ’قابلِ اعتبار ذرائع‘ کے حوالے سے کہا ہے کہ فواد شام سے فرانس واپس آیا تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption 13 نومبر کو پیرس میں ہونے والے حملوں میں 130 افراد ہلاک ہوئے تھے

فرانسیسی پولیس بتاکلان میں خودکش حملے کرنے والے دو افراد کی شناخت کر چکی ہے جن کے نام 29 سالہ عمر اسماعیل مصطفیٰ اور 28 سالہ سمیع امیمور بتائے گئے تھے۔

اس سے قبل یونان میں پولیس نے انکشاف کیا تھا کہ پیرس میں ہونے والے حملوں سے قبل جنوری میں ان حملوں کے مبینہ سرغنہ عبدالحمید اباعود کو پکڑنے کی کوشش کی تھی تاہم یہ آپریشن ناکام رہا تھا۔

بیلجیئم کے انسداد دہشت گردی کے ایک ذرائع نے بی بی سی کو بتایا کہ بیلجیئم میں چھاپہ مار کارروائیوں سے قبل ایتھنز میں عبدالحمید اباعود کو پکڑنے کے لیے منصوبہ بندی کی گئی تھی تاہم ایسا ممکن نہ ہوسکا۔

عبدالحمید اباعود ایتھنز سے فون کے ذریعے بیلجیئم میں سیل کو ہدایات دے رہے تھے۔

خیال رہے کہ عبدالحمید اباعود 13 نومبر کو پیرس میں حملوں کے پانچ دن بعد فرانسیسی پولیس کے ساتھ مقابلے میں ہلاک ہوگئے تھے۔

اسی بارے میں