امریکہ میں یوگا گرو پر لاکھوں ڈالر کا جرمانہ

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ہندوستانی نژاد امریکی بکرم چودھری ’بکرم یوگا‘ کے بانی ہیں۔ وہ پوری دنیا میں ’ہاٹ یوگا گرو‘ کے نام سے مشہور ہیں

امریکہ میں یوگا گرو بکرم چودھری پر اپنی سابق وکیل میناکشی جافا بوڈن کو جنسی طور پر ہراساں کرنے اور انھیں نوکری سے نکالنے پر 60 لاکھ امریکی ڈالر سے زائد کا جرمانہ عائد کیا گیا ہے۔

امریکی عدالت نے میناکشی کی طرف سے لگائے جانے والے جنسی تشدد کے الزام پر سماعت کرتے ہوئے یہ فیصلہ سنایا ہے۔

بھارتی نژاد 69 سالہ بکرم چودھری امریکہ میں مقیم ارب پتی ہیں اور وہ اپنے مخصوص قسم کے یوگا کے لیے معروف ہیں جسے انھوں نے سنہ 2002 میں متعارف کرایا تھا اور اس کے تحت وہ گرم کمرے میں یوگا کرواتے ہیں۔

یہ 60 لاکھ ڈالر کا معاوضہ اس دس لاکھ ڈالر سے علیحدہ ہے جو انھیں میناکشی کو ادا کرنا ہے۔ اس کے بارے میں عدالت نے پیر کو فیصلہ سنایا تھا۔

میناکشی لاس اینجلس میں بکرم چودھری کے یوگا سکول میں سنہ 2011 سے 2013 تک قانونی اور بین الاقوامی امور کی سربراہ تھیں۔

انھوں نے کہا کہ انھیں ان کے عہدے سے اچانک برطرف کر دیا گیا کیونکہ انھوں نے ایک ریپ کے الزام میں جاری تحقیقات کو چھپانے سے انکار کر دیا تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption بکرم چودھری کے دنیا بھر میں 650 سے زائد یوگا سکول ہیں

اطلاعات کے مطابق منگل کو لاس اینجلس کی ایک عدالت نے یوگا گرو کو تقریباً 65 لاکھ ڈلر ادا کرنے کے لیے کہا ہے۔

پیر کو عدالت نے میناکشی کے حق میں تقریبا دس لاکھ ڈالر کا ہرجانہ ادا کرنے کا فیصلہ سنایا تھا اور کہا تھا کہ ’انھیں ہراساں کیا گیا، ان کے خلاف امتیازی سلوک برتا گیا اور انتقامی کارروائی کی گئی۔‘

اس طرح مجموعی ہرجانہ 70 لاکھ ڈالر سے زیادہ ہے۔

میناکشی کی وکیل کارلا منارڈ نے بتایا: ’بکرم نے اپنی وکیل میناکشی کا جسمانی استحصال کیا۔ انھوں نے انھیں غلط طریقے سے چھوا اور ان کے ہوٹل کے کمرے میں رکنے کی کوشش بھی کی۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption وہ ہاٹ یوگا کے لیے گرم کمرے میں یوگا کراتے ہیں

میناکشی کا کہنا ہے کہ وہ بکرم پر پرانے جنسی تشدد کے الزامات کی تحقیقات کر رہی تھیں، جس کی وجہ سے جون سنہ 2013 میں انھیں نوکری سے نکال دیا گیا تھا۔

سنہ 2013 تک میناکشی کے علاوہ چھ خواتین نے یوگا گرو پر جنسی طور پر ہراساں کرنے کا الزام لگایا تھا جس کی سماعت رواں سال اپریل میں ہونی ہے۔

سماعت کے دوران بکرم چودھری نے میناکشی کے تمام الزامات کو مسترد کردیا اور کہا کہ انھیں اس لیے نوکری سے نکالا گیا کہ انھیں امریکہ میں وکالت کی پریکٹس کے لیے لائسنس نہیں تھا۔

ہندوستانی نژاد امریکی بکرم چودھری ’بکرم یوگا‘ کے بانی ہیں۔ وہ پوری دنیا میں ’ہاٹ یوگا گرو‘ کے نام سے مشہور ہیں اور دنیا بھر میں ان کے 650 سے زائد یوگا سکول ہیں۔

اسی بارے میں