فجی میں طوفان سے تباہی

تصویر کے کاپی رائٹ epa
Image caption کئی گھر تباہ ہو گئے اور لوگوں کو پناہ گاہوں میں پناہ لینی پڑی

فجی میں حکام خطرناک طوفان کے بعد ہونے والے نقصان کا تخمینہ لگا رہے ہیں۔ اس طوفان میں کم از کم پانچ افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

ونسٹن نامی طوفان میں 320 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے ہوائیں آئیں، موسلا دھار بارش ہوئی اور 40 فٹ اونچی سمندری لہریں جزیرے سے آ کر ٹکرائیں۔

طوفان نے سینکڑوں گھر تباہ کیے اور بجلی کے کھمبوں کو اکھاڑ ڈالا جس کی وجہ سے بجلی منقطع ہو گئی۔ ایسی بھی خبریں ہیں کہ کہیں کہیں تو پورے کے پورے گاؤں ملیا میٹ ہو گئے۔

حکومت نے پورے ملک میں کرفیو لگا دیا ہے اور پولیس کو اضافی اختیارات دے دیے ہیں جس کے تحت وہ کسی کو بھی بغیر وارنٹ گرفتار کر سکتے ہیں۔

کیٹیگری فائیو کا یہ طوفان، جو کہ سب سے بڑا سمجھا جاتا ہے، فجی کے اہم جزیرے ویٹی لیوو سے سنیچر کو مقامی وقت کے مطابق شام 6:30 پر ٹکرانے کے بعد مغرب کی طرف نکل گیا۔ آخری وقت پر اس کی سمت بدلنے سے دارالحکومت ’سوا‘ کو وہ نقصان نہیں ہوا جو کہ ہو سکتا تھا۔

حکومت نے 750 پناہ کے سینٹر کھولے ہیں۔

فجی براڈکاسٹنگ کمپنی کے مطابق ملک کے دوسرے سب سے بڑے جزیرے وانوا لیوو کی ایک پناہ گاہ میں 1000 کے زیادہ افراد پناہ لیے ہوئے ہیں۔

طوفان کی وجہ سے ہلاک ہونے والوں میں ایک معمر شخص ہیں جو کہ کورو جزیرے پر ہلاک ہوئے۔ ان کے مکان کی چھت ان پر آ گری تھی۔

اسی بارے میں