بلیوں کے دن پر کیا کیا کر سکتے ہیں

کیا آپ بلیوں کے شوقین ہیں؟ اگر آپ کا جواب ہاں ہے تو جاپان وہ جگہ ہے جہاں 22 فروری کو بلیوں کا دن منایا جاتا ہے۔

جاپان میں یہ دن گذشتہ 30 سالوں سے منایا جا رہا ہے۔ اِس دن سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر بلیوں کی تصاویر، بلی کی شکل والے ڈونٹ، بسکٹ، بلی کے مختلف موڈ کی شکلیں اور دیگر چیزوں کی تصاویر شائع کر کے منایا جاتا ہے۔ اِس دن سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر یہ جاپان کا سب سے بڑا ٹرینڈ ہوتا ہے۔

بلی کے دن پر کیا ہوتا ہے؟

اِس کو جاپانی زبان میں ’نیکو نو ہی‘ کہا جاتا ہے۔ یہ دن منانے کے لیے اِس تاریخ یعنی کے (2/22) کا انتخاب اِس لیے کیا گیا ہے کہ کیونکہ اِس کا جاپانی تلفظ (نی نی نی) ہے، بالکل ویسے ہی جیسے جاپان میں بلی (نیان نیان نیان) کی آواز نکالتی ہے۔

آپ بلیوں کے ساتھ کرتب کرسکتے ہیں اور بلیوں کی طرح لباس زیبِ تن کرسکتے ہیں۔

کوس پلے کے شائقین بلیوں کے طرز کے لباس زیب تن کرکے یا بلی کے کان پہن کر تصاویر شائع کرتے ہیں۔

آپ بلیوں کی شکل والے کھانے بناسکتے ہیں اور بلیوں کی شکل والے سکے بنا سکتے ہیں۔

کئی سالوں کے دوران یہ دن کاروباری حوالے سے بھی کافی کامیاب بن چکا ہے، کیونکہ اِس دن کی مناسبت سے دکاندار بلیوں کے طرز کی اشیا فروخت کرتے ہیں۔

جاپان میں ڈزنی نے اِس دن کا نام اپنی فلم ’دا اریسٹوکیٹ‘ کے نوجوان کردار کے نام پر ’میری کا دن‘ رکھا ہے۔ اخبار آساہی شمبون کی جانب سے اِس دن پر بلیوں کے کیفے سے ایک خصوصی رپورٹ شائع کی گئی ہے، جہاں آپ بہت زیادہ بلیوں کے ساتھ ایک سے دو گھنٹے گزار سکتے ہیں۔

اِس کا آغاز کیسے ہوا؟

سنہ 1987 میں بلیوں کے حوالے سے ایک اعلیٰ سطح کی کمیٹی کی جانب سے فیصلہ کرتے ہوئے جاپان بھر میں بلی سے پیار کرنے والوں سے کہا گیا کہ 22 فروری کو بلیوں کا دن ہونا چاہیے۔

دیگر ممالک بھی بلیوں کا دن منایا جاتا ہے، لیکن چند ایک میں ہی اِس دن کو جاپان کی طرح جوش و خروش سے منایا جاتا ہے۔

جاپان کی چند مشہور بلیاں

تاما بلی نے اُس وقت خبروں میں جگہ بنائی، جب اِس کو وکایا صوبے کے ایک ریلوے سٹیشن میں اعزازی سٹیش ماسٹر بنادیا گیا۔ وہ بلی کے ناپ کی سٹیشن ماسٹر والی ٹوپی پہنتی تھی۔ جون 2015 میں اپنی موت سے قبل تک یہ سیاحوں کے لیے کافی دلچسپی کا باعث تھی۔

فروری سنہ 2016 میں تاما کو باقاعدہ طور پر سٹیشن کی ریلوے لائن کے لیے ہال آف فیم میں شامل کیا گیا۔

اسی دوران میں ایک مارو نامی بلی، اپنی متعدد یوٹیوب ویڈیوز کی وجہ سے انٹرنیٹ پر کافی مقبول ہوئی۔ سنہ 2008 سے اِس کو دیکھنے والے ناظرین کی تعداد بہت زیادہ ہے، اِس کی پہلی فلم کو دوکروڑ سے زیادہ مرتبہ دیکھا گیا تھا۔

اور اِس کے علاوہ ایک نیان کیٹ ہے، یہ ایک انٹرنیٹ میم ہے، یہ اُڑنے والی کارٹون بلی ہے اور یہ اُفق پر دھنک کے لامحدود رنگ بکھیر رہی ہوتی ہے۔

اِس اصلی ویڈیو کو 13 کروڑ سے زائد بار دیکھا گیا ہے۔

شاید یہ ’ہیلو کٹی‘ کے عالمی رجحان کے حوالے سے پائے جانے والی عام غلط فہمی کو دور کرنے کا دن بھی ہے۔ یہ بنا چہرہ والی سفید بلی تھی جس کو سنہ 1970 میں جاپانی کمپنی سنریو منظر عام پر لائی تھی۔

اگر آپ بلی کے شوقین نہیں ہیں تو؟

پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ جاپان میں 22 فروری کو ننجا یعنی کراٹوں کا دن بھی منایا جاتا ہے۔

شگا صوبے کے شہر کوکا اُن مشہور جگہوں میں سے ایک ہے جہاں یہ دن منایا جاتا ہے۔ اِس دن کی مناسبت سے ٹاؤن ہال کا عملہ حیران کردینے والے حملہ آور کے طرز کے لباس زیب تن کرتے ہیں۔