شمالی کوریا کا مال بردار بحری جہاز، فلپائن کے قبضے میں

تصویر کے کاپی رائٹ AP

فلپائن کا کہنا ہے کہ اس نے شمالی کوریا کے ایک جہاز کو قبضے میں لیا ہے اور ایسا اقوام متحدہ کی پابندیوں کے تحت کیا گیا ہے۔

شمالی کوریا کے جوہری پروگرام کی وجہ سے اس پر اقوام متحدہ کے سخت پابندی لگے ہیں۔

فلپائن کے نائب صدر کے ترجمان مانولو كيوجون کا کہنا ہے کہ ’پابندیوں کے نفاذ میں فلپائن کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔‘

قبضے میں لیے جانے والا بحری جہاز ’جن ٹینگ‘ شمالی کوریا کی کمپنی اوشن میری ٹائم مینیجمنٹ کے 31 جہازوں میں سے ایک ہے۔ یہ کمپنی بھی ان پابندیوں کے دائرے کار میں آتی ہے۔

اس بحری جہاز کو سبك کی بندر گاہ پر روکا گیا ہے اس پر لدے کھجور کے بیجوں کو اتارا جا رہا ہے۔

واصح رہے کہ شمالی کوریا پر اقوام متحدہ کی نئی پابندیوں کا نفاذ اس کی جانب سے کیے جانے والے جوہری اور بیلسٹک میزائل کے حالیہ تجربات کے بعد کیا گیا ہے۔

پابندیوں کے تحت شمالی کوریا میں آنے والے یا باہر جانے والے تمام مال بردار بحری جہازوں کا معائنہ لازمی ہے۔

فلپائن کی حکومت کا کہنا ہے کہ وہ جن ٹینگ جہاز کو قبضے میں رکھیں گے اور جہاز کے عملے کو شمالی کوریا بھیج دیا جائے گا۔

اسی بارے میں