دس چیزیں جن سے ہم گذشتہ ہفتے لا علم تھے

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

1۔ اگر آپ کا نام بزلائٹ ایئر ہے تو آپ کو برطانیہ کا ڈرائیونگ لائسنس مل سکتا ہے۔

زیادہ معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

2۔ امریکہ میں صدارتی امید وار کی دوڑ میں شامل ریپبلکن پارٹی کے امیدوار ٹیڈ کروز نے اپنے ہنی مون کے فوری بعد کیمبل چنکی سوپ کے سو ڈبّے خریدے تھے۔

زیادہ معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

3۔ قطب شمالی سنہ 2000 سے ہی لندن کی جانب بڑھ رہا ہے۔

زیادہ معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

4 ۔ گذشتہ ماہ جن لوگوں نے وینائل (گراموفون) خریدا تھا اس میں سے نصف نے ابھی تک بجایا نہیں ہے۔

زیادہ معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

5 ۔ والدین یہ نہیں بتا پاتے کہ ان کا بچّہ کب جھوٹ بول رہا ہے، ان سے بہتر تو کوئی اجنبی بتا سکتا ہے کہ بچہ جھوٹ بول رہا ہے۔

زیادہ معلومات کے لیے یہاں کلک کریں
تصویر کے کاپی رائٹ Alamy

6۔ روسی رہنما ولادی میر لینن کی حنوط شدہ لاش کو محفوط رکھنے میں سالانہ تقریباً دو لاکھ ڈالر خرچ کیے جاتے ہیں۔

زیادہ معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

7۔ تعجب کی بات یہ ہے کہ آکٹوپس بچ نکلنے کے فن میں ماہر ہوتے ہیں۔

زیادہ معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

8 ۔ مانچیسٹر ایئر پورٹ پر ایک بار سات مہینے کے وقفے میں سنفرڈاگ (کھوجی کتّے) کوئی غیر قانونی منشیات وغیرہ کا پتہ تو نہیں لگا پائے لیکن ان میں سے ایک اکثر پنیر اور ساسز ڈھونڈ نکالتا تھا۔

مزید معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

9۔ آن لائن لکھنے والے دس سب سے زیادہ معتوب لکھاریوں میں آٹھ خواتین ہیں اور دو سیاہ فام رائٹرز۔

مزید معلومات کے لیے یہاں کلک کریں

10 ۔ برطانوی دارالعوام کے کلرک اس بات سے ناواقف ہیں کہ سکاٹ لینڈ کے لوگ منس (قیمے) کا لفظ کس معنی میں استعمال کرتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسی بارے میں