جہاز کو دورانِ پرواز جھٹکے لگنے سے 30 زخمی

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption ایئر لائن نے زخمیوں کی حالت کے بارے میں معلومات فراہم نہیں کی ہے

متحدہ عرب امارات کی فضائی کمپنی اتحاد ایئرویز کے جہاز کو انڈونیشیا میں دوران پرواز غیر متوقع طور پر شدید جھٹکے کے واقعے میں 30 سے زائد افراد زخمی ہوگئے۔

اتحاد ایئر ویز کی یہ پرواز ابوظہبی سے روانہ ہوئی تھی اور جکارتہ سے 45 منٹ کی دوری پر اسے ناہمواری کا سامنا کرنا پڑا۔

ایئربس اے 330-200 جہاز اس حادثے کے بعد خیریت سے ایئر پورٹ اتر گیا جبکہ زخمی ہونے والے دس افراد کو ہسپتال منتقل کیا گیا ہے۔

پرواز کے دوران ویڈیو فوٹیج میں جھٹکوں کی وجہ سے مسافروں کو روتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

متحدہ عرب امارات کی قومی ایئر لائن کے حکام نے فرانسیسی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کو بتایا ہے کہ جہاز میں سامان رکھنے والے کیبنز یا خانوں کو نقصان پہنچا جبکہ ناہموار پرواز کے دوران آکسیجن کے ماسک کھولنے پڑے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption اطلاعات کے مطابق زخمیوں میں سے زیادہ تر کی ہڈیاں ٹوٹ گئی ہیں

ایئر لائن نے زخمیوں کی حالت کے بارے میں معلومات فراہم نہیں کی لیکن نو مسافروں اور عملے کے ایک رکن کو ہسپتال منتقل کیا گیا ہے جبکہ زخمی ہونے والے دیگر مسافروں کو ہوائی اڈے پر ہی طبی امداد فراہم کی گئی۔

اطلاعات کے مطابق ہسپتال میں منتقل کیے جانے والے زخمیوں میں سے زیادہ تر کی ہڈیاں ٹوٹ گئی ہیں۔

اتحاد ایئر ویز نے جکارتہ سے ابوظہبی واپس آنے والی پرواز کو منسوخ کر دیا ہے جبکہ مسافروں کو متبادل پروازیں اور رہائش فراہم کی جا رہی ہیں۔

جکارتہ کے ایئر پورٹ کے مطابق ٹرانسپورٹ میں حفاظتی معیار پر نظر رکھنے والے حکام حادثے کا شکار ہونے والے جہاز کا معائنہ کر رہے ہیں۔

اسی بارے میں