ایک دن صرف پیدل چلنے والوں کے لیے

تصویر کے کاپی رائٹ AP

فرانسیسی حکام کی جانب سے دارالحکومت پیرس کی مشہور شاہراہ شانزے لیزے کو ٹریفک کے لیے ایک دن بند کرنے کے اقدام کا پیدل چلنے والوں نے بھرپور فائدہ اٹھایا۔

ہزاروں افراد پر مشتمل ایک پرجوش ہجوم نے آٹھ رویہ شاہراہ پر دوکانوں اور کیفے کے سامنے چہل قدمی کی۔

عام طور پر اس علاقے میں گاڑیوں، ٹرکوں اور موٹرسائیکلوں کے رش کی وجہ سے پیدل چلنے والوں کے لیے جگہ نہیں ہوتی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

پیرس میں کار فری ڈے یعنی گاڑیوں کے بغیر دن کا اہتمام ہر ماہ کی پہلی اتوار کو کیا جا رہا ہے۔

اس منصوبے کا آغاز پیرس کی میئر اینی ہیڈالگو نے کیا جس کا مقصد بڑھتی ہوئی فضائی آلودگی میں کمی کرنا ہے۔

صرف راہ گیروں کے اس دن کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ یہ تجربہ انتہائی کامیاب رہا اور شہر کے رہائشی اور سیاح محرابِ فتح کی جانب جانے والی اس دو کلومیٹر طویل شاہراہ پر چہل قدمی سے خوب لطف اندوز ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP

فرانس کے وزیر اعظم مینوئل ولس اور میئر اینی ہیڈالگو بھی اس موقع پر موجود تھے۔

اس مشہور شاہراہ پر سٹریٹ پرفامرز نے بھی اپنے فن کا مظاہرہ کیا جسے بڑی تعداد میں وہاں موجود پیدل آنے والے لوگوں نے دیکھا۔

خیال رہے کہ اس قبل پیرس انتظامیہ فضائی آلودگی کو کم کرنے کے لیے کئی اقدامات کر چکی ہے جن میں کرائے کی سائیکلیں، سائیکلنگ کے لیے راستے اور الیکٹرک گاڑیوں کا سفر شامل ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP

اسی بارے میں