یمن میں پولیس رنگروٹوں پر خودکش حملہ، 25 ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption القاعدہ کے مکالا سے پسپا ہونے کے بعد سے دولتِ اسلامیہ کی یہ شہر میں دوسری بڑی دہشت گردی کی کارروائی ہے

یمن میں حکام کا کہنا ہے کہ ملک کے جنوبی شہر مکالا میں ہونے والے ایک خودکش حملے میں کم از کم 25 افراد ہلاک ہوئے ہیں۔

اس حملے کی ذمہ داری شدت پسند تنظیم دولت اسلامیہ نے قبول کی ہے۔

حکام کے مطابق خودکش بمبار نے ساحلی شہر مکالا میں پولیس کے دفتر کے باہر خود کو اس وقت دھماکے اڑایا جب وہاں حال ہی میں بھرتی ہونے والے افراد قطار میں کھڑے تھے۔

مکالا سے آنے والے اطلاعات کے مطابق دھماکے کے نتیجے میں زخمی ہونے والے 25 افراد کو مقامی ہسپتال میں لایا گیا ہے۔

یمن میں جاری تنازع کے نتیجے میں سنہ 2011 سے اب تک 20 لاکھ افراد بے گھر ہو چکے ہیں۔

خیال رہے کہ گذشتہ ماہ ہی سعودی عرب کی سربراہی میں بنائے گئے فوجی اتحاد نے علاقے میں کارروائی کر کے دولتِ اسلامیہ کی حریف القاعدہ فی جزیرہ نما عرب کو یہاں سے نکلنے پر مجبور کر دیا تھا۔

القاعدہ کے مکالا سے پسپا ہونے کے بعد سے دولتِ اسلامیہ کی یہ شہر میں دوسری بڑی دہشت گردی کی کارروائی ہے۔

گذشتہ ہفتے اس تنظیم نے فوج پر ہونے والے ایک کار بم حملے کی بھی ذمہ داری قبول کی تھی۔

5 لاکھ سے زیادہ آبادی والے اس شہر پر القاعدہ نے ایک سال سے زیادہ عرصے سے قبضہ کیا ہوا تھا۔

.

اسی بارے میں