دس چیزیں جن سے ہم گذشتہ ہفتے لاعلم تھے

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption بیٹ مین کی رفتار سے زمین پر اترنے کا خطرہ

1۔ بیٹمین ہوا میں اڑتے ہوئے جو رفتار حاصل کرتا ہے اس سے اگر وہ زمین پر اترے تو شاید اس کی موت واقع ہو جائے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (دا گارڈین)

2۔ آسٹریلیوئی روڈینٹ یا چوہا شاید وہ پہلا میمل ہے جو شاید انسان کے ذریعے پیدا شدہ تبدیلی آب و ہوا سے ناپید ہو جائے ۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (نیویارک ٹائمز)

3۔ سورج نے دوسرے شمسی نظام سے سیارے ’چرائے‘ ہیں۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (نیو سائنٹسٹ)

4۔ دلائی لاما کو یہ یاد نہیں کہ انھوں نے فلم ’کيڈی شیک‘ دیکھی ہے یا نہیں۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (گاکر)

5۔ سیکھنے کے چار گھنٹے بعد ورزش کرنے سے آپ کو معلومات کو یاد رکھنے میں مدد مل سکتی ہے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں
تصویر کے کاپی رائٹ SCIENCE PHOTO LIBRARY
Image caption پڑھائی کے بعد ورزش کے فوائد

6۔ فلم ’سٹیئر وے ٹو ہیون‘ میں جو موسیقی کی ہم آہنگی ہے وہ جزوی طور پر میری پوپن کے گیت ’چم چم چیری‘ سے متاثر ہے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (ڈیلی ٹیلیگراف)

7۔ آئر لینڈ کے دلدل میں اگر مکھن کا ڈلا یا ٹکڑا گر جائے تو دو ہزار سال تک وہاں دفن رہنے کے بعد بھی وہ کھانے لائق رہ سکتا ہے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (سائنس الرٹ)

8۔ نام نہاد تنظیم دولت اسلامیہ کے ٹوئٹر اکاؤنٹ کو ہزاروں پورن دیکھنے والے فالو کرتے ہیں۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں

9۔ رولس رائس کی پہلی بغیر ڈرائیور کی کار میں ریشم کا ’تخت‘ ہے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (دا گارڈین)

10۔ اگر انگلینڈ کی فٹبال ٹیم کو ’50 سال کا صدمہ‘ ہے تو فرانس اور نیدر لینڈ نے اس سے زیادہ عرصے تک کوئی بین الاقوامی مقابلہ نہیں جیتا ہے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں (دا اکونومسٹ)

اسی بارے میں