برطانیہ کے یورپ میں رہنے یا نکل جانے کا فیصلہ آج

Image caption بورس جونسن اور نائجل فراج یورپی یونین سے نکل جانے پر زور دے رہے ہیں

یورپی یونین میں رہنے یا نکل جانے پر برطانیہ میں تاریخی ریفرنڈم آج جمعرات کو ہو رہا ہے۔

پولنگ سٹیشن مقامی وقت کے مطابق صبح سات بجے سے رات دس بجے تک کھلے رہیں گے۔

ایک اندازے کے مطابق اس ریفرنڈم میں 46,499,537 افراد ووٹ ڈالنے کے اہل ہیں۔ یہ برطانوی انتخابات میں ریکارڈ تعداد ہے۔

برطانیہ کی تاریخ میں یہ تیسرا ریفرنڈم ہے جو کہ یورپی یونین میں رہنے یا نکل جانے کے لیے ہونے والی چار ماہ کی مہم کے بعد ہو رہا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption ڈیوڈ کیمرون کا کہنا تھا کہ ’اگر میں اس پوری مہم کو ایک لفظ میں بیان کروں تو وہ لفظ ہو گا ’اکٹھے‘

اس سے قبل یورپی یونین میں رہنے یا نکل جانے پر برطانیہ میں ہونے والے ریفرنڈم کی مہم کے آخری روز سیاستدان عوام کو اپنی جانب مائل کرنے کے لیے بھرپور زور لگاتے رہے۔

برطانوی عوام سے پوچھا جائے گا کہ کیا برطانیہ کو یورپی یونین میں رہنا چاہیے یا نہیں۔

ریفرنڈم کے لیے پولنگ کا وقت ختم ہونے کے بعد بیلٹ باکس کو سیل کر کے گنتی کے لیے قائم 382 مراکز میں پہنچایا جائے گا۔

مختلف علاقوں کے نتائج کو جمعرات اور جمعے کی درمیانی شب جاری کیا جاتا رہے گا تاہم حمتی نتائج کا اعلان مانچسٹر کے ٹاؤن ہال سے چیف کاؤنٹنگ افسر کریں گے۔

انتخابی کمیشن کے مطابق حمتی نتیجہ جمعے کی صبح تک متوقع ہے۔

اسی بارے میں