’طلاق کی درخواستیں آج نہ دیں‘

تصویر کے کاپی رائٹ Rossiya 1

روس کے شمال مغربی علاقے میں آٹھ جولائی کو مقامی ویلنٹائنز ڈے منایا گیا جس کے تحت انتظامیہ نے اس دن طلاق کی کوئی درخواست نہیں لی۔

روس کے نووگروٹ کے علاقے میں انتظامیہ نے کہا کہ جمعہ آٹھ جولائی کو وہ صرف شادی کی درخواستیں قبول کریں گے۔

روس میں پیٹر اینڈ فیورونیا ڈے منایا جا رہا ہے جو اہل و عیال، محبت اور وفاداری کا دن ہے۔ اس دن کو روس میں شادی کے لیے خوش قسمت دن سمجھا جاتا ہے۔

نووگروڈ میں اس دن کو جوش و ولولے کے ساتھ منایا گیا۔ وہ جوڑے جو 25 سال سے اکٹھے ہیں ان کو تمغے دیے جائیں گے اور وہ جوڑے جنھوں نے چار سے سات بچے پیدا کیے ہیں ان کو بھی انعامات سے نوازا جائے گا۔

نووگروڈ کی سول رجسٹری کی اہلکار ارینا سموسووا کا کہنا ہے کہ 2008 سے اب تک اس علاقے میں جتنی شادیاں آٹھ جولائی کو ہوئیں ہیں ان میں سے صرف 12 فیصد ناکام ہوئی ہیں۔

روس کے دیگر علاقے میں بھی آٹھ جولائی منایا جا رہا ہے اور حکام لوگوں سے کہہ رہے ہیں کہ اس دن طلاق کے لیے درخواستیں نہ دیں۔

تاہم روس کا اورتھوڈوکس چرچ اس دن کی حمایت نہیں کرتا۔ چرچ کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ’لوگوں کی ازدواجی حیثیت دباؤ اور انکار سے تبدیل کرنا اچھا طریقہ نہیں ہے‘۔

اسی بارے میں