’ٹرمپ میں کردار، اقدار اور تجربے کی کمی ہے‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP

رپبلکن نیشنل سکیورٹی کے 50 ماہرین نے ایک کھلے خط پر دستخط کیے ہیں جس میں خبردار کیا گیا ہے کہ صدارتی امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ ’امریکی تاریخ کے سب سے لاپروا صدر ہوں گے۔‘

50 ماہرین کے گروپ جس میں سی آئی سے کے سابق ڈائریکٹر مائیکل ہیڈن بھی شامل ہیں کا کہنا ہے کہ ’ڈونلڈ ٹرمپ میں صدر بننے کے لیے کردار، اقدار اور تجربے کی کمی ہے۔‘

٭ رپبلکنز میں اختلافات، ’ٹرمپ ذہنی طور پر غیر متوازن ہیں‘

اس خط پر دستخط کرنے والوں میں سے کئی ایسے ہیں جنھوں نے اسی جیسے ایک خط پر مارچ میں دستخط کرنے سے انکار کردیا تھا۔

اس کے جواب میں ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ ’یہ وہ لوگ ہیں جو واشنگٹن کے ممتاز افراد کا حصہ بننے میں ناکام رہے اور اب طاقت حاصل کرنا چاہتے ہیں۔‘

یہ خط ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب کئی اہم رپبلکنز رہنماؤں نے ڈونلڈ ٹرمپ کو تسلیم کرنے سے انکار کردیا۔

رپبلکن امیدوار نے کہا ہے کہ امریکہ نیٹو کے ساتھ اپنی وعدوں کی عزت کرے۔ انھوں نے اذیت دینے کی تائید کی اور مشورہ دیا ہے کہ جنوبی کوریا اور جاپان کو جوہری ہتھیاروں سے لیس ہونا چاہیے۔

اس خط میں کہا گیا ہے کہ ’ڈونلڈ ٹرمپ بطور رہنما امریکہ کی اخلاقی اتھارٹی کو کمزور کر رہے ہیں۔‘

’ایسا لگتا ہے کہ ان میں امریکی آئین پر یقین کی کمی کے ساتھ ساتھ، امریکی قوانین، اداروں، مذہبی برداشت، پریس کی آزادی اور آزاد عدلیہ کے بارے میں بنیادی علم کی کمی ہے۔‘

اس میں مزید کہا گیا ہے کہ ’ہم میں سے کوئی بھی ڈونلڈ ٹرمپ کو ووٹ نہیں دے گا۔‘

اپنے ایک بیان میں ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ ’اس خط میں جن لوگوں کے نام ہیں ان سے دنیا میں اتنی خرابیوں کے لیے امریکیوں کو ضرور پوچھنا چاہیے۔‘

ان کا مزید کہنا تھا کہ ’ہم آگے آنے کے لیے ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں، تاکہ اس ملک میں ہر کوئی جان سکے کہ دنیا کو اتنی خطرناک جگہ بنانے کے لیے کس کو الزام دینا چاہیے۔‘

اسی بارے میں