بیلجیم: فرانزک لیبارٹری میں آتشزدگی، پانچ گرفتار

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption آگ کے نتیجے میں لیبارٹری کو شدید نقصان پہنچا ہے

بیلجیم کے دارالحکومت برسلز میں پولیس نے جرائم کے مقامات سے ملنے والے ثبوتوں کا تجزیہ کرنے والی سرکاری لیبارٹری کو آگ لگانے کے الزام میں پانچ افراد کو گرفتار کیا ہے۔

حکام کے مطابق لیبارٹری کو آگ فرانزک ثبوت مٹانے کے لیے لگائی گئی ہے۔

خیال رہے کہ نیشنل انسٹیٹیوٹ آف کریمنالوجی نامی اس لیبارٹری میں مختلف جرائم کے فرانزک ثبوتوں کا تجزیہ کیا جاتا ہے۔

برسلز میں ہونے والے حالیہ دہشت گرد حملے کے بعد سے بیلجیم میں سکیورٹی ہائی الرٹ ہے ۔

لیبارٹری کی عمارت کو ایک کار سے ٹکر ماری گئی جس کے بعد لیبارٹری میں آگ بھڑک اٹھی۔

پولیس نے اس بات کی تصدیق نہیں کی کہ آیا کوئی بم دھماکہ بھی ہوا ہے کہ یا نہیں۔

سرکاری محکمہ پراسیکیوشن کی ترجمان وین وئمریش کے بقول بظاہر آگ لگانے کی وجہ لیبارٹری میں موجود ثبوتوں کو تباہ کر نا تھا۔

ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے وین وئمریش کا کہنا تھا کہ ’ پانچ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے، اس جگہ کا انتخاب خاص طور پر کیا گیا ہے، یہاں اہم جرائم کے ثبوت موجود تھے۔‘

حکام کے مطابق امدادی اداروں نے موقع پر پہنچ کر آگ پر قابو پا لیا ہے اور آگ کے نتیجے میں کسی قسم کا کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ہے۔

مقامی میڈیا کے مطابق آگ کے نتیجے میں لیبارٹری کو شدید نقصان پہنچا ہے۔

مقامی میڈیا پر دکھانی والی تصاویر میں لیبارٹری کی عمارت سے آگ کے شعلے اور دھواں اٹھتا دیکھا جاسکتا ہے۔

اسی بارے میں