چین صنعتی پیداوار کو کنٹرول کرے: اوباما

تصویر کے کاپی رائٹ EPA

امریکی صدر براک اوباما نے چین سے مطالبہ کیا ہے کہ صنعتی اشیا کی زیادہ پیداوار کو کنٹرول کرنے کے لیے اقدامات اٹھائے۔

کئی کمپنیوں نے چین پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ بڑی مقدار میں اشیا سستے داموں مارکیٹ میں بیچتا ہے جس کے باعث ان ممالک میں مقامی کمپنیوں کے لیے مقابلہ کرنا مشکل ہو جاتا ہے۔

یاد رہے 30 ممالک کے ہنگامی اجلاس کے بعد اپریل میں چین نے وعدہ کیا تھا کہ وہ سٹیل کی پیداوار میں کمی لائے گا۔

صدر براک اوباما نے چین کے وزیر اعظم لی کیچیانگ سے نیو یارک میں ملاقات کی۔ دونوں رہنما اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے لیے نیو یارک آئے ہوئے ہیں۔

وائٹ ہاؤس سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ صدر اوباما نے چین سے مطالبہ کیا کہ سب کو موقع ملنا چاہیے تاکہ تمام کمپنیاں منصفانہ طور پر کاروبار کر سکیں۔

رواں سال کے آغاز میں یورپی یونین کے چیمبر آف کامرس نے چین پر الزام عائد کیا تھا کہ چین زیادہ مقدار میں اشیا بنانے کے ایشو کو سنجیدگی سے حل کرنے کی کوششیں نہیں کر رہا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں